کرکٹ

خاموش رہیے!!

اگر پاکستانی ٹیم 49برس بعد نیوزی لینڈ کیخلاف ہوم سیریز میں شکست سے دوچار ہوئی ہے تو اس ٹیم پر تنقید کرنے کی بجائے خاموش رہیے…اگر سرفراز احمد کی کپتانی میں قومی ٹیم دوسری مرتبہ ہوم سیریز میں ناکامی پر مجبور ہوئی ہے تو پھر بھی اس ٹیم پر تنقید کرنے کی بجائے خاموش رہیے…اگر آخری 10ٹیسٹ میچز میں پاکستانی ٹیم نے پانچ شکستیں سمیٹیں ہیں تو پھر بھی آپ خاموش ہی رہیے…اگر چھوٹے ہدف دیکھ کر بھی چوتھی اننگز میں گرین شرٹس کی ٹانگیں کانپنا شروع ہوجاتی ہیں تو پھر بھی اس ٹیم پر تنقید کا کوئی حق نہیں ہے بلکہ آپ خاموش رہیے کیونکہ یہ کیسے ممکن ہے کہ غیر ملکی ہائی پروفائل کوچ مکی آرتھر کی کوچنگ میں کوئی کمی ہو جس کی وجہ سے پاکستانی ٹیم ہارنے پر مجبور ہورہی ہے؟ یہ کیسے ممکن ہے کہ ہر مرتبہ بیٹنگ لائن کی ناکامی کا ذمہ دار پانچ سال سے بیٹنگ کوچ گرانٹ فلاور کو ٹھہرالیا جائے ؟یہ کیسے مان لیا جائے کہ اوپنرز کی کارکردگی خراب ہے کہ پچھلے ایک سال سے فخر زمان کی دو اننگز کے علاوہ 30سے زائد کی اوسط سے بیٹنگ کرنا اوپنرز کیلئے جوئے شیر لانے کے مترادف رہا ہے؟یہ مفروضہ بھی غلط ہے کہ کپتانی کے دباؤ تلے سرفراز احمد کی بیٹنگ خراب ہوئی ہے جس نے 17اننگز میںصرف تین نصف سنچریاں اسکور کی ہیں۔اس کا بھی کوئی جواز نہیں ہے کہ اگر اس ایک سال میں یاسر شاہ اور محمد عباس کی مجموعی طور پر 99 وکٹوں کی ایک طرف رکھ دیا جائے تو باقی بالرز کا پول کھل جاتا ہے۔اور یہ کیا فضول بحث چھیڑ دی گئی ہے کہ مصباح اور یونس کی موجودگی میں پاکستانی ٹیم کی کارکردگی زیادہ بہتر تھی اور اب ان کے جانے کے بعد بیٹنگ لائن میں وہ دم خم موجود نہیں رہا جس کی ضرورت چوتھی اننگز میں ہوتی ہے…
اس تنقید کرتے ہوئے اس ٹیم کا مورال نہ گرائیں،اس ٹیم کو اپنے پیروں پر کھڑا ہونے دیں ،غیر ملکی کوچز پر بے جا تنقید نہ کریں ، کپتانی پر بھی کوئی بات نہ کریں، بالرز کی خراب کارکردگی کو نہ اُچھالیں، مسلسل ناکامیوں کے باوجود بیٹسمینوں کے بے حوصلہ نہ کریں…اس لیے فتح پر جشن منائیں ، شکستوں پر آنکھیں اور کان بند کرلیںاور صرف خاموش رہیے!!

Subscribe to Blog360

Enter your email address to subscribe to Blog360 and receive notifications of new posts by email.

Join 182 184 other subscribers